Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

ساؤتھ افریقہ کے سابق فاسٹ بولر مکھایا نٹینی نے کرک ان جف کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ آپ کسی بھی ملک کا دورہ کر لیں میزبان ٹیم کی کوشش ہوتی ہے کہ وہ آپ کو اس میدان پر سب سے پہلے کھیلائیں جہاں مہمان ٹیم کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑے۔ انھوں نے کہا کہ آپ آسٹریلیا چلے جائیں وہ آپ کو پرتھ میں کھیلائیں گے جہاں کی پچز تیز اور باؤنسی ہے، یہی طریقہ ساؤتھ افریقہ اور دیگر میزبان ممالک اپناتے ہیں۔
مکھایا نٹینی نے مزید کہا کہ پوری ٹیسٹ سیریز میں پاکستانی بیٹسمینوں نے بہت مایوس کن پرفارمنس دکھائی اور صرف ایک مرتبہ ہی پوری ٹیم ایک اننگز میں 50 سے زائد اوورز کھیل سکی۔ ساؤتھ افریقہ کی بولنگ کے حوالے گفتگو کرتے ہوئے انھوں ںے کہا کہ ہمارے پاس تجربہ بولرز ہیں جن میں ویرنن فیلنڈر، ڈیل اسٹین اور کگیسو رباڈا شامل ہیں جبکہ اولیویئر نے بھی شاندار بولنگ کی۔
پاکستان کی فاسٹ بولنگ کے حوالے سے مکھایا نٹینی نے کہا کہ پاکستان کو ایک تیز بولر کی کمی محسوس ہوئی جو کہ 140 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے بولنگ کرا سکے۔