Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

سابق ٹیسٹ کرکٹر مشتاق احمد نے پاکستانی کرکٹرز کو مشورہ دیا ہے کہ وہ 16 جون کو بھارت کے خلاف میچ ہار کے خوف کو دل اور دماغ سے نکال کر کھیلیں۔ مشتاق احمد نے کہا کہ انگلش کنڈیشنز پاکستانی کرکٹرز کے لیے سازگار ہیں، یقین ہے کہ سلیکشن کمیٹی ایک اچھا اسکواڈ منتخب کرے گی اور ہیڈکوچ مکی آرتھر بہترین پلاننگ کے ساتھ ٹیم کو میدان میں اتاریں گے۔
سابق ٹیسٹ کرکٹر نے کہا کہ عابد علی اور محمد حسنین بہترین صلاحیتوں سے مالامال کرکٹر ہیں، عابد علی اور محمد رضوان کو ساتھ لے کر جانا 'ٹرمپ کارڈ' ثابت ہو سکتا ہے۔ انھوں نے پی سی بی کی فٹنس ٹیسٹ پالیسی کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ صرف فٹنس کی بنیاد پر باصلاحیت کھلاڑیوں کو ٹیم سے ڈراپ کرنا زیادتی ہو گی۔
مشتاق احمد نے مزید کہا کہ ورلڈکپ میں انگلینڈ کے کپتان این مورگن پاکستان ٹیم کو فیورٹ قرار دے رہے ہیں، قومی ٹیم کو فیورٹ قرار دینا پریشر میں لانے کی بھی ایک کڑی ہو سکتی ہے۔ انھوں نے سینیئر پلیئرز کی ٹیم میں موجودگی کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ شعیب ملک اور حفیظ دونوں کو ٹیم میں ہونا چاہیئے۔