Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

محمد عامر کے بین الاقوامی کرکٹ میں ڈیبیو کے بعد سے دو ورلڈکپ گزر چکے ہیں جبکہ تیسرا آئندہ ماہ شروع ہو گا۔ آئندہ ماہ انگلینڈ اینڈ ویلز میں شروع ہونے والے ورلڈکپ کے لیے محمد عامر کو ٹیم میں شامل نہیں کای گیا۔ فاسٹ بولر نے 2009 میں ڈیبیو کیا تو تہلکہ مچا دیا تھا مگر کچھ ہی عرصے بعد اسپاٹ فکسنگ میں پکڑے گئے۔
اسپاٹ فکسنگ میں پکڑے جانے کے بعد محمد عامر پر پابندی لگا دی گئی۔ 2011 کے ورلڈکپ میں محمد عامر پابندی کی وجہ سے ٹیم میں شامل نہیں ہو سکے۔ 2015 کے ورلڈکپ سے پہلے انھیں ڈومیسٹک کرکٹ کھیلنے کی تو اجازت مل گئی تھی لیکن ان پر بین الاقوامی کرکٹ کے دروازے نہیں کھولے گئے تھے۔
تیسرے ورلڈکپ میں محمد عامر کے اسکواڈ میں شامل ہونے کے امکانات تھے مگر ناقص پرفارمنس نے عامر کا ساتھ نہ دیا اور ان کا پہلی مرتبہ ورلڈکپ کھیلنے کا خواب چکنا چور ہو گیا۔ محمد عامر آخری دس میچز میں صرف تین وکٹیں لے سکے ہیں جو ان کے ڈراپ ہونے کی وجہ بنا۔
ورلڈکپ سے پہلے انگلینڈ کے خلاف ہونے والی سیریز میں محمد عامر کو شامل کیا گیا ہے۔ اگر انھوں نے انگلینڈ کے خلاف اچھی پرفارمنس دی تو آئی سی سی کی منظوری کے بعد انھیں ورلڈکپ کے لیے قومی اسکواڈ میں جگہ مل سکتی ہے۔