Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

انگلینڈ کے خلاف سیریز سے پہلے لیگ اسپنر شاداب خان وائرس کا شکار ہوئے تو قومی سلیکٹرز نے یاسر شاہ کو ٹیم میں شامل کر لیا اور سلیکشن کمیٹی کے اس فیصلے پر سوالات اٹھائے جا رہے ہیں۔ یاسر شاہ کی ٹیسٹ فارمیٹ میں خدمات سے کسی کو انکار نہیں تاہم جہاں تک ون ڈے کرکٹ کی بات ہے تو ان کی کارکردگی اس فارمیٹ میں اتنی اچھی نہیں رہی۔
آسٹریلیا کے خلاف ون ڈے سیریز میں یاسر شاہ پانچ میچز میں صرف چار وکٹیں حاصل کر سکے تھے لیکن اس کے باوجود انھیں ورلڈکپ کے ابتدائی کھلاڑیوں میں شامل کیا گیا۔ فٹنس ٹیسٹ میں بھی یاسر شاہ کی پرفارمنس زیادہ تر کھلاڑیوں سے نیچے دکھائی دی مگر پھر بھی انھیں انگلینڈ کے خلاف سیریز کے لیے منتخب کر لیا گیا ہے۔
شائقین نے سوشل میڈیا پر سوالات اٹھاتے ہوئے کہا کہ آسٹریلیا کے خلاف بری پرفارمنس کے باوجود یاسر شاہ کو منتخب کرنا سمجھ سے بالاتر ہے۔ شائقین نے محمد نواز یا عمر خان جیسے کھلاڑیوں کو ٹیم میں شامل کرنے کی تجویز دی۔ دوسری جانب یاسر شاہ کا کہنا ہے کہ انھیں ٹیم میں واپسی پر خوشی ہے، شاداب خان کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ امید ہے شاداب جلد فٹ ہو جائیں گے۔