Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

سرفراز احمد نے 2016 میں انگلینڈ کی سرزمین پر کھیلے جانے واحد ٹی ٹوئنٹی میچ میں ٹیم کی قیادت کی ذمہ داری سنبھالی تھی۔ اُس میچ سے بطور ٹی ٹوئنٹی کپتان سرفراز احمد کی کامیابیوں کا سلسلہ شروع ہوا جو تین سال کے عرصے کے بعد برطانیہ کی سرزمین پر ہی ٹوٹا۔ اس دوران سرفراز احمد نے لگاتار 11 ٹی ٹوئنٹی سیریز میں پاکستان کو فتح سے ہمکنار کروایا اور اسی وجہ سے آج پاکستان ٹی ٹوئنٹی کی نمبرون ٹیم ہے۔
گزشتہ روز انگلینڈ کے خلاف کھیلے جانے والے واحد ون ڈے میچ میں شکست کی وجوہات پر نظر ڈالی جائے تو سب سے پہلی وجہ پاکستان کا کم اسکور تھا۔ میچ کے اختتامی اوورز کی جانب بڑھتے ہوئے بابر اعظم، حارث سہیل اور آصف علی کی وکٹیں دو اوورز میں گر گئیں جس وجہ سے پاکستان 20-15 رنز کم بنا سکا۔
اس کے بعد بولنگ اور فیلڈنگ میں پاکستانی بولرز وہ کارکردگی نہیں دکھا سکے جس کی ان سے توقع کی جا رہی تھی۔ ٹیم کے اہم بولرز فہیم اشرف نے 3.2 اوورز میں 43 اور حسن علی نے 4 اوورز میں 42 رنز دیے۔ اس کے علاوہ فیلڈنگ میں حارث سہیل اور دیگر کھلاڑیوں کے ہاتھ پاؤں پھولے ہوئے نظر آئے۔