Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ شائقین کے بعد اب سابق کرکٹرز کو بھی 1992 کی مماثلت پر یقین آنے لگا ہے۔ سابق کپتان وقار یونس نے کہا کہ اب 1992 کی مماثلت کو نظر انداز کرنا مشکل ہو گیا ہے۔ وقار یونس نے کہا کہ اتنی چیزیں ایک جیسی ہو رہی ہیں کہ اب پلیئرز کے لیے بھی اس سے جان چھڑانا مشکل ہے۔
سابق کپتان قومی ٹیم کی پرفارمنس سے مطمئن نظر آئے اور انھوں نے کہا کہ سیمی فائنل میں جانے کے لیے ہم صحیح سمت میں جا رہے ہیں اور اگر ایسا ہی پرفارم کرتے رہے تو سیمی فائنل کے ساتھ فائنل بھی جیت سکتے ہیں جو یقینا ملک کے لیے ایک تاریخی لمحہ ہو گا۔
وقار یونس کو 1992 کے ورلڈکپ میں ٹیم سے باہر ہونے کا دکھ آج بھی ہے۔ انھوں نے کہا کہ اس وقت باہر ہونے کا دکھ بہت ہوا مگر جب ورلڈکپ جیتے تو اس سے زیادہ دکھ ہوا کیونکہ میں ٹیم کے ساتھ نہیں تھا۔