Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

زمبابوے کرکٹ کی مشکلات کم ہونے کا نام نہیں لے رہیں۔ پہلے زمبابوے کی کرکٹ سرگرمیاں معطل ہوئیں اور اب ان کی مستقل رکنیت بھی خطرے میں پڑ گئی ہے۔
گزشتہ ہفتے انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کی جانب سے زمبابوے کو لندن میں ہونے والی میٹنگ کے نتائج سے باضابطہ طور پر آگاہ کرتے ہوئے کہا گیا کہ وہ غیرمشروط طور پر جون میں منتخب ہونے والے عہدیداران کو بحال کرے یا پھر اپنی رکنیت منسوخ ہونے کیلئے تیار رہے۔
آئی سی سی میٹنگ میں زمبابوے کرکٹ اور وہاں پر حکومتی اسپورٹس کمیشن کی مقرر کردہ عبوری کمیٹی دونوں کا موقف سنا گیا جس کے بعد متفقہ طور پر زمبابوے کو معطل کر دیا گیا۔
اب آئی سی سی کے چیف ایگزیکٹیو مانو ساہنی کی جانب سے بھیجے گئے خط میں زمبابوے پر واضح کیا گیا کہ اگر وہ چاہتے ہیں کہ معطلی پر آئی سی سی کی جانب سے نظرثانی ہو تو پھر وہ تمام اقدامات کرنا ہوں گے جن پر عمل کرنے کا کہا جا رہا ہے۔
رواں برس 14 جون کو منتخب ہونے والے عہدیداران کو 8 اکتوبر سے قبل بحال کرنا ہو گا تا کہ آئی سی سی بورڈ کی 12 اکتوبر کو شیڈول میٹنگ میں اس معاملے کا جائزہ لیا جا سکے۔ اس کے ساتھ یہ شواہد بھی پیش کرنا ہوں گے کہ اب کرکٹ معاملات میں حکومت کی جانب سے کوئی مداخلت نہیں ہو گی۔