Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

افغانستان کے وکٹ کیپر بیٹسمین محمد شہزاد کی مشکلات کم ہونے کا نام نہیں لے رہیں۔ ورلڈکپ کے آغاز میں ہی ان کو وطن واپس بھیج دیا گیا تھا۔ اب ان پر ایک اور مشکل آن پڑی۔ محمد شہزاد پاکستان کے شہر پشاور میں پریکٹس کرتے اور کلب میچز کھیلتے پائے گئے تھے۔
افغانستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے جاری کیے جانے والے اعلامیہ کے مطابق وکٹ کیپر بیٹسمین ڈسپلن کی متعدد خلاف ورزیوں میں ملوث پائے گئے ہیں، ملک میں ٹریننگ کی تمام تر سہولیات میسر ہونے کے باوجود کئی بار بلا اجازت بیرون ملک گئے۔
افغانستان کرکٹ بورڈ نے محمد شہزاد کو ایک سال کے لیے معطل کر دیا ہے۔ معطلی کے نتیجے میں وہ کسی بھی قسم کی کرکٹ سرگرمی میں حصہ نہیں لے سکیں گے۔ یاد رہے محمد شہزاد کو گزشتہ سال بھی پشاور میں ایک کلب کی جانب سے میچز کھیلنے کے جرم میں 4,400 ڈالر جرمانہ کیا گیا تھا۔