Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

پاکستان ٹیم کے سابق بولنگ کوچ اظہر محمود نے انکشاف کیا کہ چیمپئنز ٹرافی جیتنے کے بعد تمام اختیارات مکی آرتھر کے پاس چلے گئے تھے، عثمان شنواری کے ساتھ زیادتی ہوئی جبکہ سرفراز ون ڈے اور ٹی ٹوئنٹی میں بہتر کپتان ہیں۔
ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے سابق باؤلنگ کوچ اظہر محمود پھٹ پڑے۔ اظہر محمود نے کہا کہ چیمپئنز ٹرافی جیتنے کے بعد ہیڈ کوچ مکی آرتھر ون مین شو بن گئے، ٹیم کے انتخاب میں ہماری زیادہ رائے شامل نہیں ہوتی تھی، بعد میں سرفراز اور مکی نے سلیکشن اور فائنل الیون میں بھی خود فیصلے کیے، انھیں اور گرانٹ فلاور کو اتنی اہمیت نہیں دی گئی۔
سابق بولنگ کوچ نے کہا کہ عثمان شنواری کے ساتھ زیادتی ہوئی، انھیں ورلڈکپ میں کھیلنا چاہیے تھا۔ انھوں نے کہا کہ کرکٹ کمیٹی کے سامنے بلائے بغیر فارغ کیا گیا جو اصولوں کے خلاف ہے، ہم سے ہماری کارکردگی کے بارے میں پوچھنا چاہیے تھا۔ اظہر محمود نے مزید کہا کہ عامر اور وہاب کو ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ نہیں لینی چاہیے، نوجوان فاسٹ بولرز شاہین شاہ آفریدی، حسن علی اور حسنین پاکستان کے لیے لمبے عرصے تک کھیل سکتے ہیں۔