Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

پاکستان میں انٹرنیشنل پلیئرز اور ڈومیسٹک پلیئرز کی فٹنس میں کافی فرق ہے، یہی وجہ ہے کہ جب ڈومیسٹک سے کھلاڑی قومی ٹیم میں آتے ہیں تو انہیں کافی فٹنس مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ پی سی بی نے فٹنس کے لیے سخت پالیسی بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔
ذرائع کے مطابق اب پلیئرز کے فٹنس ٹیسٹ میں 19 نمبرز ہونا ضروری ہیں۔ اگر تین، چار فٹنس ٹیسٹ کے بعد بھی پلیئر کے 19 نمبرز نہ آئے تو اس کی تنخواہ سے 15 فیصد کٹوتی ہو گی۔ ویمن پلئیرز کے لیے 16.5 نمبرز کا ہدف مقرر کیا گیا ہے۔
اگر ویمن پلیئرز اس پر پورا نہ اتریں تو ان کی تنخواہ کا دس فیصد حصہ کاٹ لیا جائے گا۔ مکی آرتھر نے ہیڈکوچ بننے کے بعد فٹنس پر کافی کام کیا اور اس کی اہمیت اجاگر کی۔ پی سی بی اب بھی مکی آرتھر کی پالیسی کو آگے لے کر چل رہا ہے۔