Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

ویسٹ انڈیز کے معروف جارح مزاج بیٹسمین کرس گیل کے ستارے گردش میں ہیں اور وہ اپنی فارم بحال کرنے میں کامیاب نہیں ہو پا رہے۔ کرس گیل ساؤتھ افریقہ میں جاری مزانسی سپر لیگ میں خاطرخواہ کارکردگی کا مظاہرہ نہ کر سکے اور اپنی ٹیم کے لیے بھی سود مند ثابت نہیں ہوئے۔
کرس گیل چھ میچوں میں صرف 101 رنز ہی بنا پائے جبکہ ان کی ٹیم جوزی اسٹارز کو ایونٹ کے تمام میچز میں ناکامی کا منہ دیکھنا پڑا۔ اس ناقص پرفارمنس پر شائقین کرکٹ کی جانب سے شدید ردعمل کا اظہار کیا گیا۔
اس موقع پر کرس گیل آگ بگولہ ہو گئے اور پریس کانفرنس کا سہارا لے کر غصے میں جوزی اسٹار کی ٹیم کو خدا حافظ کہہ دیا۔ کرس گیل نے کہا کہ میں جب دو، چار میچز میں پرفارم نہیں کرتا تو مجھے ٹیم پر بوجھ تصور کیا جاتا ہے۔
انہوں نے کہا کہ لوگوں کو بھی یاد نہیں رہتا کہ میں نے ٹیم کے لیے کئی یادگار اننگز بھی کھیلی ہیں۔ کرس گیل نے مزید کہا کہ فرنچائز کرکٹ میں خراب پرفارمنس پر پیٹھ پیچھے برائیاں ہوتی ہیں جو کہ اچھی بات نہیں ہے، فرنچائز کرکٹ میں مجھے عزت نہیں ملی۔
ان کا کہنا تھا کہ میرے ساتھ یہ ناروا سلوک صرف ساؤتھ افریقہ میں ہی نہیں بلکہ دیگر لیگز میں بھی یہی برتاؤ کیا جاتا ہے۔ کرس گیل نے کہا کہ ٹیم کی ہار اور جیت میں تمام کھلاڑی شامل ہوتے ہیں، کسی ایک کی وجہ سے نہ ٹیم جیتی ہے اور نہ ہارتی ہے۔