Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
No live scores available
View All Matches

ٹیسٹ کرکٹر کامران اکمل کافی عرصے سے قومی ٹیم سے باہر ہیں۔ ڈومیسٹک کرکٹ میں مسلسل پرفارم کرنے کے باوجود انہیں قومی ٹیم میں جگہ بنانے کا موقع نہیں مل رہا۔ کامران اکمل نے اپنی سلیکشن کے حوالے سے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ماضی میں کوچز کی وجہ سے کئی کھلاڑیوں کو بہت نقصان ہوا ہے اور میں بھی ان کرکٹرز میں شامل ہوں۔
انہوں نے سابق ہیڈکوچ مکی آرتھر کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ وہ پسند ناپسند پر کھلاڑیوں کو ٹیم میں کھلاتے تھے جس کا نقصان صرف کھلاڑیوں کو ہی نہیں پاکستان کرکٹ ٹیم کو بھی ہوا ہے۔
کامران اکمل نے کہا کہ مصباح الحق نے ہیڈکوچ اور چیف سلیکٹر بننے کے بعد افتخار احمد کو موقع دیا ہے جس وجہ سے ڈومیسٹک کرکٹ کے پرفارمرز کو ایک بار پھر حوصلہ ملا ہے۔
وکٹ کیپر بیٹسمین کا کہنا تھا کہ امید ہے مصباح الحق ڈومیسٹک میں پرفارم کرنے والے دیگر کھلاڑیوں کو بھی اہمیت دیں گے۔ کامران اکمل نے ٹیسٹ ٹیم سے ڈراپ ہونے کے بعد ڈومیسٹک کرکٹ میں 21 سنچریاں اسکور کی ہیں۔
دوسری جانب عمراکمل کا کہنا ہے کہ گزشتہ تین سال سے ٹیم میں ان آؤٹ ہوتا رہا ہوں، ڈومیسٹک میں پرفارم کر رہا ہوں، اس مرتبہ واپسی کا موقع ملا تو کوشش کروں گا کہ اس طرح پرفارم کروں کہ قومی ٹیم کا مستقل حصہ بن جاؤں۔