Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

پاکستان کا فرسٹ کلاس ٹورنامنٹ قائد اعظم ٹرافی 20-2019 سینٹرل پنجاب کی کامیابی سے ساتھ ختم ہو چکا ہے۔ پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کی جانب سے ڈومیسٹک کرکٹ کا نیا ڈھانچہ متعارف کروایا گیا تھا جس کے تحت چھ ٹیموں نے اس ٹورنامنٹ میں حصہ لیا۔ اس کے علاوہ پی سی بی نے ڈومیسٹک ٹورنامنٹس میں کوکابورا کی گیندوں کا استعمال کیا۔
قائد اعظم ٹرافی 20-2019 کا سیزن بیٹسمینوں اور اسپن باؤلرز کے بہت اچھا ثابت ہوا۔ پاکستان کے فرسٹ کلاس ٹورنامنٹ میں یہ پہلا موقع تھا کہ ایک وکٹ پر 40 سے زائد رنز اسکور ہوئے ہوں۔
قائد اعظم ٹرافی کے گزشتہ ایڈیشن میں ٹیموں کا پہلی اننگز میں اوسط ٹوٹل 426 رنز رہا جو دیگر ممالک کے پچھلے فرسٹ کلاس ٹورنامنٹس کے مقابلے میں سب سے زیادہ ہے۔
قائد اعظم ٹرافی کی تاریخ میں ایسا پہلی مرتبہ ہوا کہ 15 کھلاڑیوں نے ایونٹ میں 500 سے زائد رنز اسکور کیے اور ان کی بیٹنگ اوسط 50 سے زائد رہی۔
قائد اعظم ٹرافی 20-2019 میں کوئی بھی ٹیم 100 کے مجموعی اسکور سے کم پر آؤٹ نہیں ہوئی۔ اس مرتبہ پاکستان کے فرسٹ کلاس ٹورنامنٹ کے ٹاپ چار باؤلرز اسپنرز تھے۔
ناردرن کی ٹیم کے کپتان اور اسپنر نعمان علی نے سب سے زیادہ 54 وکٹیں حاصل کیں جبکہ فاسٹ باؤلرز میں سندھ کے تابش خان نے 25 آؤٹ کیے۔