Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

آسٹریلوی کرکٹرز کو فکسنگ کی پیشکش کرنے کے الزام میں سلیم ملک پر تاحیات پابندی عائد کی گئی تھی۔ لاہور کی مقامی عدالت نے 2008 میں سلیم ملک کی سزا ختم کر دی تھی لیکن پاکستان کرکٹ بورڈ کے دروازے ان کیلئے آج بھی بند ہیں۔
انضمام الحق نے سلیم ملک کے حوالے سے کہا ہے کہ وہ بہت باصلاحیت کرکٹر تھے، ان کی کرکٹ کا اختتام ناخوشگوار انداز میں ہوا لیکن اب انہیں ایک اور موقع دینا چاہیے۔
سابق کپتان نے کہا کہ بھارت کے کپتان اظہرالدین کو بھی میچ فکسنگ کے الزام میں سزا ہوئی تھی مگر اب وہ بھارتی کرکٹ بورڈ کے ساتھ کام کر رہے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ سلیم ملک کا شمار اس دور کے بہترین کرکٹرز میں ہوتا تھا، نوجوان نسل نے شاید انہیں کھیلتا نہیں دیکھا لیکن وہ کرکٹ کا بہترین تجربہ رکھتے ہیں اور پی سی بی ان کی خدمات حاصل کر سکتا ہے۔
سلیم ملک نے 103 ٹیسٹ میچز میں پاکستان کرکٹ ٹیم کی نمائندگی کی جس میں انہوں نے 5768 رنز اسکور کیے جبکہ 283 ون ڈے میچوں میں 7170 رنز اور 89 وکٹیں ان کے کریڈٹ پر ہیں۔