Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
No live scores available
View All Matches

راشد لطیف نے 1992 میں انگلینڈ کیخلاف ٹیسٹ ڈیبیو کیا تھا۔ راشد لطیف کو سیریز کے پانچویں ٹیسٹ میچ میں کھیلنے کا موقع ملا تھا اور ان کے ٹیسٹ ڈیبیو کی ایک دلچسپ کہانی بھی ہے جس کے بارے میں بہت کم لوگ جانتے ہیں۔
اوول ٹیسٹ میچ سے قبل جاوید میانداد نے راشد لطیف کو جیفری بائیکاٹ سے ملوایا تھا۔ راشد لطیف سے ملنے کے بعد جیفری بائکاٹ نے کہا تھا کہ یہ لڑکا 30 رنز سے زیادہ نہیں بنا پائے گا۔
جاوید میانداد نے جیفری بائیکاٹ سے کہا تھا کہ راشد لطیف پرفارم کریں گے جس پر جیفری بائکاٹ نے کہا کہ اگر یہ لڑکا 30 سے زیادہ رنز اسکور کرے گا تو میں اسے 5 پاؤنڈز دوں گا۔
راشد لطیف نے اپنے ڈیبیو ٹیسٹ میچ کی پہلی اننگز میں نصف سنچری اسکور تھی۔ راشد لطیف نے جیسے ہی 31 رنز اسکور کیے تو جیفری بائکاٹ نے کمنٹری باکس سے 5 پاؤنڈ بھی دکھائے تھے۔
راشد لطیف نے اس حوالے سے بتایا ہے کہ جب نصف سینچری اسکور کی تو جیفری بائکاٹ نے ڈریسنگ روم میں آکر سب کے سامنے مجھے 5 پاؤنڈز پر دستخط کرکے دیے اور کہا کہ چاکلیٹ کھا لینا