Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
View All Matches

چیئرمین ڈسپلنری پینل جسٹس ریٹائرڈ فضلِ میراں چوہان نے بکیز کی جانب سے ہونے والے رابطے کو رپورٹ نہ کرنے کی وجہ سے عمر اکمل پر تین سال کی پابندی عائد کر دی ہے۔
سابق وکٹ کیپر راشد لطیف نے عمر اکمل پر لگنے والی پابندی پر ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ قومی بیٹسمین پر پابندی کا درست فیصلہ کیا گیا ہے لیکن میرا ذاتی خیال ہے کہ ان پر تاحیات پابندی عائد کرنی چاہیے تھی۔
راشد لطیف نے کہا یہ بات تو طے تھی کہ عمر اکمل پر پابندی لگے گی کیونکہ انہوں نے پی سی بی کے اینٹی کرپشن کوڈ کی خلاف ورزی کی تھی اور انہیں قوانین کے مطابق سزا دی گئی ہے۔
رمیز راجہ کا کہنا ہے کہ عمر اکمل بھی بیوقوفوں کی فہرست میں شامل ہو گئے، ایک ٹیلنٹ ضائع ہو گیا، یہ بہترین وقت ہے کہ میچ فکسنگ کے خلاف قانون سازی کر لی جائے۔
وہ عمر اکمل کو ملنے والی سزا پر زیادہ مطمئن دکھائی نہیں دیئے اس لیے انہوں نے کہا کہ کرپٹ عناصر کی جگہ جیل کی سلاخوں کے پیچھے ہے اور اگر اس سے بھی زیادہ سخت سزا دی جائے تو اچھا ہے۔