Recently Finished
Live Cricket
Upcoming Matches
No live scores available
View All Matches

بابر اعظم قومی ٹیم کی جانب سے کھیلتے ہوئے تینوں فارمیٹس میں مسلسل پرفارم کر رہے ہیں۔ خاص طور پر ٹیسٹ کرکٹ میں ان کی کارکردگی میں بہتری آئی ہے۔ قومی ٹیم کے سابق کوچ مکی آرتھر کا کہنا ہے کہ طویل دورانیے کی کرکٹ میں بابر اعظم کا پرفارم کرنا پاکستان ٹیم کیلئے خوش آئند ہے۔
بابر اعظم کو ٹیسٹ کرکٹ کا پلیئر بنانے میں مکی آرتھر کا اہم کردار ہے۔ وہ مکی آرتھر ہی تھے جو مسلسل ناکام ہونے کے باوجود بابر اعظم کو مواقع دے رہے تھے۔
مکی آرتھر کے کرک ان جف کو دیئے گئے انٹرویو میں انہوں نے کہا ہے کہ 2016 میں مجھے معلوم تھا کہ بابر اعظم ون ڈے اور ٹی ٹوئنٹی کے بہترین بیٹسمین ہیں لیکن ٹیسٹ کرکٹ میں پرفارم کرنے کیلئے انہیں بہت محنت اور صبر کرنا ہو گا۔
انہوں نے کہا کہ مجھے ابھی بھی یاد ہے بابر اعظم کو ٹیسٹ کرکٹ میں مسلسل مواقع دینے پر کس طرح پاکستانی میڈیا کی جانب سے مجھ پر تنقید کی جاتی تھی لیکن میں نے کہا تھا جب تک پاکستان کی کوچنگ کر رہا ہوں کوئی بھی فارمیٹ ہو بابر اعظم ٹیم میں ضرور منتخب ہوں گے۔
مکی آرتھر نے بابر اعظم کا موازنہ جیک کیلس کرتے ہوئے کہا کہ میں جانتا تھا بابر اعظم میں بہت ٹیلنٹ ہے، ابتدائی 10 ٹیسٹ میچز کے بعد جیک کیلس کی رنز بنانے کی اوسط 9 تھی لیکن مسلسل مواقع ملنے کے بعد انہوں نے پرفارم کر کے دکھایا کیونکہ وہ بہت باصلاحیت تھے، یہی چیز میں نے بابر اعظم میں بھی دیکھی تھی اور مجھے امید ہے وہ بھی جیک کیلس کی طرح کرکٹ کی دنیا میں اپنا نام بنائیں گے۔